February 21, 2018=National News

توبہ نعوذبااللہ اراکین پارلیمنٹ اچھے ہیں چورکیوں کہیں؟چیف جسٹس سپریم کورٹ

 چیف جسٹس آف سپریم کورٹ جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاہے کہ توبہ نعوذبااللہ اراکین پارلیمنٹ اچھے ہیں چورکیوں کہیں؟ہم نے کسی رکن پارلیمنٹ کوچورڈاکونہیں کہا،ہم نے ریمارکس دیے کہ ماشاء اللہ ہماری لیڈرشپ اچھی ہے،نیلسن منڈیلا سے متعلق عدالتی آبزرویشن کی غلط رپورٹنگ کی گئی۔میڈیا رپورٹس کے مطابق آج سپریم کورٹ میں چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں بنچ نے انتخابی اصلاحات کیس کی سماعت کی۔

اس موقع پرچیف جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس دیے کہ ہم نے کسی رکن پارلیمنٹ کوچورڈاکونہیں کہا۔ہم نے ریمارکس دیے کہ ماشاء اللہ ہماری لیڈرشپ اچھی ہے۔کسی کووضاحت دینے کی ضرورت نہیں ہے۔ہم فریق نہیں ہیں۔توبہ نعوذبااللہ اراکین پارلیمنٹ اچھے ہیں چورکیوں کہیں؟ ہم کسی کووضاحت دینے کے پابندنہیں۔چیف جسٹس نے کہاکہ نیلسن منڈیلا سے متعلق عدالتی آبزرویشن کی غلط رپورٹنگ کی گئی۔
عدالتی کاروائی کی ریکارڈنگ موجود ہے۔انہوں نے کہاکہ عام لیڈراور پارٹی سربراہ کے جلسے میں فرق ہوتاہے۔چیف جسٹس نے کہاکہ کھوسہ صاحب آپ لاہورمیں جلسہ کریں گے توکتنے لوگ آئیں گے؟ اگریہی جلسہ محترمہ بے نظیربھٹوکرتی توکتنے لوگ آتے؟ جسٹس اعجاالااحسن نے کہاکہ سیاسی جماعتوں میں ون میں شونہیں ہوناچاہیے۔

Like Our Facebook Page

Latest News