January 4, 2018-Healths

’جو مرد 40برس تک کنوارے رہتے ہیں، انہیں یہ بیماری نہیں ہوتی‘ سائنسدانوں نے مردوں کو سب سے بڑی خبر دے دی، اس قربانی کا ناقابل یقین فائدہ بتادیا

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک)شادی شدہ مردوں کے تجربے سے سبق سیکھنے کی بجائے شادی کا لڈو کھانے پر مصر مردوں کابیاہ جلد نہ ہو تو عجب غمزدگی ان کے چہرے پرعیاں ہوتی ہے لیکن اب سائنسدانوں نے 40سال تک کنوارے رہنے والے مردوں کو ایسی خوشخبری سنا دی ہے کہ ان کی غمزدگی خوشی میں بدل جائے گی۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق آکسفورڈ یونیورسٹی کے سائنسدانوں نے نئی تحقیق میں بتایا ہے کہ ”جو مرد 40سال کنوارے رہیں ان کو مثانے کے غدودوں کا کینسر لاحق ہونے کا خطرہ انتہائی کم ہو جاتا ہے۔“

اس تحقیق میں سائنسدانوں نے 50سے 69سال عمر کے 2لاکھ 20ہزار مردوں کی ازدواجی حیثیت اور انہیں پراسٹیٹ کینسر لاحق ہونے کے امکانات کا تجزیہ کرکے نتائج مرتب کیے ہیں جن کے مطابق جو مرد40سال تک جنسی تعلق سے دور رہتے ہیں ان کو یہ کینسر لاحق ہونے کے امکانات 47فیصد کم ہو جاتے ہیں۔تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ پروفیسر ’ٹم کی‘کا کہنا تھا کہ ”کنوارے مردوں کو یہ مرض لاحق نہ ہونے کی ممکنہ وجہ یہ ہو سکتی ہے کہ جنسی تعلق کے دوران جو انفیکشنز مردوں کو ہوتی ہیں یہ ان سے محفوظ رہتے ہیں۔مردانہ جنسی ہارمون ٹیسٹاسٹرون کی کم مقدار بھی اس کی ایک وجہ ہو سکتی ہے، کیونکہ ہم جانتے ہیں کہ اس ہارمون کی کم مقدار پراسٹیٹ کینسر کے نسبتاً کم خطرے سے منسلک ہے۔“واضح رہے کہ مثانے کے غدودوں کا کینسر مردوں میں عام پائی جانے والی بیماری ہے جو گاہے جان لیوا بھی ثابت ہوتی ہے۔

Like Our Facebook Page

Latest News